شوکت عزیزصدیقی کی اپیل سماعت کےلئے مقررکرنے کی منظوری

aiksath.com.pk

اسلام آباد:عدالت عظمی نے ملک کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے بارے میں بیان دینے پر برطرف کیے گئے اسلام آباد ہائیکورٹ کے سابق جج جسٹس شوکت عزیزصدیقی کی اپیل کھلی عدالت میں سماعت کے لیے مقرر کردی ہے ۔

سپریم کورٹ کے جسٹس عمر عطا بندیال نے اپنے چیمبرمیں شوکت عزیز صدیقی کو ہٹانے کے سپریم جوڈیشل کونسل کے فیصلے کے خلاف دائر درخواستوں پر اعتراضات کے خلاف چیمبر اپیلوں کی سماعت کی۔

فاضل جج جسٹس عمر عطا بندیال نے کراچی بار، اسلام آباد ہائی کورٹ باراور لاہو ہائیکورٹ بارراولپنڈی بنینچ کی درخواستوں کی سماعت بھی کی۔

درخواست گزاروں کی جانب سے سینئر وکیل رشید اے رضوی اور محمد قاسم میر جت پیش ہوئے۔ سپریم کورٹ نے تین درخواستوں پر رجسٹرار کے اعتراضات ختم کر دیئے ہیں۔عدالت نے رجسٹرار آفس کو حکم دیا ہے کہ درخواستیں کھلی عدالت میں سماعت کے لیے مقرر کی جائیں۔

یاد رہے کہ سپریم جوڈیشل کمیشن نے آئی ایس آئی کے خلاف تقریر کرنے کے الزام میں اسلام آباد ہائیکورٹ کے جج کو برطرف کرنے کی سفارش کی تھی جس پر صدر مملکت کی طرف سے برطرفی کا نوٹیفیکیشن جاری کیا گیا تھا.