چار سال میں نیب کے41 میگا کرپشن سکینڈل کیسے نمٹائے گئے

aiksath.com.pk

اسلام آباد (عابدعلی آرائیں) نیب کے زیر تفتیش کرپشن کے میگا سکینڈلزمیں سے چار سال میں صرف 6ریفرنس اپنے منطقی انجام کو پہنچ سکے ہیں.

179میگا سکینڈلز میں سے انکوائریوں اور انویسٹی گیشنزسمیت کل41 مقدمات نمٹائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

نیب کی دستاویزات میں انکشاف کیا گیا ہے کہ سال 2015میں قومی احتساب بیورو( نیب) کے پاس 179میگا سکینڈلز مختلف مراحل میں تھے یہ سکینڈلز کئی سال سے زیر التوا تھے جبکہ گذشتہ چار سال میں ان میگا سکینڈلزکی انکوائریوں اور انویسٹی گیشنزسمیت کل41 مقدمات نمٹائے گئے ہیں ،چار سال میں صرف 6ریفرنسزمیں ملزمان کو سزا ہوئی جس کی بنا پروہ نمٹائے جاچکے ہیں ،

نیب کی دستاویزات کے مطابق مئی 2015میں سپریم کورٹ میں 179میگا سکینڈلزکی فہرست جمع کرائی گئی تھی،اس فہرست کے مطابق 2015میں نیب کے پاس کرپشن کے میگا سکینڈلز کے حوالے سے جاری انکوائریوں کی تعداد 81تھی 52انوسٹی گیشنز اور 46میگا سکینڈلز کے ریفرنسز کاٹرائل متعلقہ عدالتوں میں جاری تھا۔

دستاویزات کے مطابق نیب نے ان میگا سکینڈلز کو نمٹانے کو ترجیح دی اور گذشتہ چار میں میگااسکینڈلز کے حوالے سے جاری 81 انکوائریوں میں سے40انکوائریوں کو انوسٹی گیشنز میں تبدیل کیا گیا اور چھ انکوائریوں میں رضاکارانہ واپسی کے ذریعے نمٹایا گیا جبکہ 20دیگر انکوائریوں کو بند کردیا گیا یامتعلقہ اداروں میں بھجوا دیا گیا، چار سال پرانی ان انکوائریوں میں سے 15اب تک زیر التوا ہیں ،

یہ خبر بھی پڑھیں: چیئرمین نیب کا وڈیوسکینڈل ایک بار پھر منظر عام پرآگیا

سال 2015کی کل 52انوسٹی گیشنز میں 40 مزیدوہ انوسٹی گیشنز شامل ہوئیں جوپہلے انکوائری کی سٹیج پر تھیں اس طرح اس عرصہ میں کل 92انویسٹی گیشنز ہوگئیں جن میں سے 65انویسٹی گیشنز کے ریفرنسز متعلقہ عدالتوںمیں دائر کئے گئے چار انوسٹی گیشنز پلی بار گین کے ذریعے ختم ہوگئیں اور پانچ انویسٹی گیشنز مختلف وجوہات کی بناپرختم کردی گئیں اس طرح 92انوسٹی گیشنز میں سے 74انوسٹی گیشنز نمٹادی گئیں چار سال قبل ظاہر کی گئی انویسٹی گیشنز میں سے 18انوسٹی گیشنز اب بھی التواکاشکارہیں ۔

سال 2015میں سپریم کورٹ میں پیش کی گئی فہرست میں بتا یا گیا تھا کہ نیب کے پاس 46میگا سکینڈلز کے ریفرنس زیر التوا تھے جبکہ ان چار سال میں انوسٹی گیشنز سے 65نئے میگا سکینڈل کے بھی ریفرنس دائر ہوئے اس طرح ریفرنسزکی مجموعی تعداد 111 ہوگئی ، ان میگا سکینڈلز سے 6ریفرنس مجرمان کو سزا دلانے کے بعد نمٹا دیئے گئے ہیں جبکہ اس وقت 105میگا سکینڈلز کے ریفرنس متعلقہ عدالتوں میں مختلف سٹیج پر انڈر ٹرائل ہیں ۔

یہ خبر بھی پڑھیں: نیب نے ‌20سال میں 20ارب بجٹ خرچ کیا،2019میں بجٹ دوگنا ہوگیا

نیب کے پاس اس وقت بھی بدعنوانی کے 105میگا سکینڈلز زیر التوا ہیں جن میں 15انکوائریاں، 18انوسٹی گیشنز، 105 ریفرنسزشامل ہیں۔ ان میگا سکینڈلز میں سے 28مقدمات مالی کرپشن، 20زمینوں ، اور 20مقدمات اختیارات کے غلط استعمال اور عوامی عہدوں کے ناجائز فائدہ لینے سے متعلق ہیں۔