ڈینیل پرل کے مبینہ قاتلوں کی رہائی سپریم کورٹ میں چیلنج

aiksath.com.pk

اسلام آباد : حکومت سندھ نے پاکستان میں قتل ہونے والے امریکی صحافی ڈینیل پرل کے مقدمہ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا،

پراسیکیوٹر جنرل سندھ کی جانب سے دائر کی گئی اپیل میں کہا گیا ہے کہ ہائیکورٹ نے ملزمان کو ریلیف دینے ہوئے اخباری تراشوں پر انحصار کیا اخباری تراشوں میں ملزم احمد عمر شیخ کا جرم کا اعتراف ظاہر ہوتا ہے۔

اپیل میں کہا گیا ہے کہ ہائیکورٹ ملزمان کا کالعدم تنظیموں سے تعلق کا بھی جائزہ نہیں لیاملزمان کا ماضی داغدار ہونے کا جائزہ بھی نہیں لیا گیا اس لئے سندھ ہائیکورٹ کے فیصلہ سقم ہیں ۔

سندھ حکومت کی جانب سے تین اپیلوں میں تمام ملزمان کو فریق بنایا گیا ہے درخواستوں میں استدعا کی گئی ہے کہ سندھ ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے اور ٹرائل کورٹ کی طرف سے ملزمان کو سنائی گئی سزائیں بحال کی جائیں ۔

اپیل میں کیس کے مرکزی ملزم احمد عمر شیخ کی سزائے موت جبکہ ملزمان فہد سلیم،سلمان ثاقب،شیک محمد عادل کی عمر قید سزا بحال کرنے کی استد عا کی گئی ہے۔