وزیر اعظم کے کمیشن کی سربراہی کےلئے ثاقب نثار زیادہ موزوں، مشاہداللہ

aiksath.com.pk

اسلام آباد: رہنما مسلم لیگ(ن)مشاہد اللہ خان نے طنزیہ لہجہ اختیار کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم کے اعلان کردہ کمیشن کے لئے سابق چیف جسٹس ثاقب نثارزیادہ موزوں ہے،ثاقب نثار بھی تو عمران کان کا اپنا ہی آدمی ہے۔

پارلیمنٹ ہائوس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سینیٹر مشاہد اللہ خان نے کابینہ ارکان کے ڈوپ ٹیسٹ کرانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ کابینہ کے جس بھی رکن کا ڈوپ ٹیسٹ مثبت آئے اسے کابینہ سے فارغ ہونا چاہیے،کیونکہ جب تک اس کابینہ کا ڈوپ ٹیسٹ نہیں ہو گا ملک آگے نہیں بڑھ سکتا۔

سینیٹر مشاہداللہ خان نے وزیراعظم کے قوم سے خطاب اپنے ردعمل میں کہا کہ وزیر اعظم نے گزشتہ روز جس کمیشن کا اعلان کیا اس کے چیئرمین بھی خود بن بیٹھے ہیں، یہ بالکل ایسا ہی ہے کہ جیسے کوئی بچہ کہے کہ میں خود مخالف کو مار کر بدلہ لوں گا

انہوں نے کہا کہ اگر عمران خان سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کو اس کمیشن کا چیئرمین بناتے تو زیادہ اچھا نتیجہ نکلتا،کیونکہ ثاقب نثار بھی تو عمران کان کا اپنا ہی آدمی ہے،ثاقب نثار جے آئی ٹی بنانے کے ماہر ہیں، یہ مشورہ بھی عمران خان کو انہی نے دیاتھا،ثاقب نثار کو ذمہ داری ملے تو وہ یہاں سے بھی اقامہ نکال دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ہم تو مار کھانے کے عادی ہیں جس دن عمران خان کو مار پڑی ان کی بریک گولڈ اسمتھ کے گھر سے پہلے نہیں لگنی۔اس موقع پر مشاہد اللہ خان نے شعر پڑھا کہ ادھر آ ستمگر ہنر آزمائیں تو تیر آزما ہم جگر آزمائیں۔